Muskurahat poetry in urdu

*دبی دبی سی وہ مسکراہٹ…*

*لبوں پہ اپنے سجا سجا کے …*

*وہ نرم لہجے میں بات کرنا …*

*ادا سے نظریں جھکا جھکا کے…*
*وہ آنکھ تیری شرارتی سی…*

*وہ زلف ماتھے پہ ناچتی سی…*

*نظر ہٹے نہ ایک پل بھی …*

*میں تھک گیا ھوں ہٹا ہٹا کے…*
*وہ تیرا ہاتھوں کی انگلیوں کو…*

*ملا کے زلفوں میں کھو سا جانا…*

*حیاء کو چہرے پہ پھر سجانا…*

*پھول سا چہرہ کھلا کھلا کے …*
*وہ ہاتھ حوروں کےگھر ھوں جیسے…*

*وہ پاؤں پریوں کے پر ہوں جیسے…*

*نہیں ھے تیری مثال جاناں….میں تھک گیا ھوں بتا بتا کے …..!!*